صفحۂ اول / کھیل / بھارتی شہر دہلی میں 12 سالہ بچے نے گیم کی خاطر اپنی ماں کی سونے کی چین چوری کرکے فروخت کردی

بھارتی شہر دہلی میں 12 سالہ بچے نے گیم کی خاطر اپنی ماں کی سونے کی چین چوری کرکے فروخت کردی

ویب ڈیسک: آن لائن گیمز موجودہ دور کی ایسی چیز ہے جس نے بچوں تو کیا بڑوں کو بھی اپنے سحر میں جھکڑ رکھا ہے، لیکن اس کے نقصان کا کسی کو کوئی اندازہ نہیں ہے۔

اسی حوالے سے  بھارتی شہر دہلی میں  12 سالہ بچے نے گیم کی خاطر اپنی ماں کی سونے کی چین چوری کی اور اسے 20 ہزار روپے میں فروخت کردیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق بچہ آن لائن گیم فری فائر کھیلنے میں مصروف تھا کہ اس دوران اسے گیم میں کچھ ہتھیار خریدنے کیلئے پیسوں کی ضرورت پڑی اور اگر وہ ہتھیار نہ خریدتا تو گیم مزید نہیں کھیل سکتا تھا۔

گیم اپ ڈیٹ کرنے کیلئے بچے نے پہلے اپنے والد کی جیب سے کچھ پیسے نکالے جو پورے نہیں تھے۔

رپورٹ کے مطابق پکڑے جانے کے ڈر سے بچہ گھر سے فرار ہوگیا اور دہلی سے بذریعہ ٹرین علی گڑھ پہنچ گیا جہاں اسے ایک مسافر نے پلیٹ فارم پر دیکھا تو مشکوک جان کر فوری طور پر ریلوے پروٹیکشن فورس کو مطلع کیا۔

ریلوے پولیس نے بچے سے تفتیش کی جس پر اس نے جرم کا اعتراف کیا، پھر اس معاملے کی بچے کے والدین کو خبر کی گئی جس کے بعد وہ فوری طور پر علی گڑھ پہنچ گئے۔

بچے کے والد کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ انہوں نے اسے موبائل لاک ڈاؤن کے دوران آن لائن کلاسز لینے کیلئے دیا تھا لیکن اس نے گیمز کھیلنا شروع کردیں۔