صفحۂ اول / پاکستان / پی آئی اے کا طیارہ تحویل میں لیے جانے پر سینئرصحافی حامد میر اور سلیم صافی حکومت پر برس پڑے
Hamid mir and Saleem Safi

پی آئی اے کا طیارہ تحویل میں لیے جانے پر سینئرصحافی حامد میر اور سلیم صافی حکومت پر برس پڑے

مانیٹرنگ ڈیسک: ملائیشیا میں پی آئی اے کے طیارے کو قبضے میں لینے کے پر سینئر صحافی سلیم صافی اور حامد میر حکومت پر برس پڑے۔

تفصیلات کے مطابق سینئر صحافی و اینکر پرسن حامد میر نے اپنے ٹویٹر پیغام میں لکھا کہ “کبھی برطانیہ میں پاکستان کے بنک میں موجود پاکستانیوں کی رقم براڈ شیٹ اپنے قبضے میں لے لیتی ہے کبھی ملائشیا میں پی آئی اے کے طیارے سے مسافروں کو اتار کر طیارہ تحویل میں لے لیا جاتا ہے پاکستان کو دنیا بھر میں ذلیل کرایا جا رہا ہے جو اس ذلالت پر افسوس کرے وہ ملک دشمن قرار پاتا ہے ‘‘۔

جبکہ سینئر صحافی سلیم صافی نے حکومت پر تنقید کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹر پیغام میں کہا کہ آپ کو تبدیلی پسند آئی؟۔۔جس قدر سونامی سرکارنےعالمی سطح پرپاکستان کورسوا کیا،ماضی کی کسی حکومت نےنہیں کیا۔

پاکستان کی اس حالت زار کا نہایت دکھ ہےلیکن ضمیرمطمئن ہے کہ دباؤ کے باوجوداس منحوس تبدیلی کوبرپاکرنےکی گناہ میں شریک جرم نہیں ہوا۔

خیال رہے کہ آج پاکستان انٹر نیشنل ائیر لائن ( پی آئی اے) کا بوئنگ 777 طیارہ کوالالمپورایئرپورٹ پرمقامی حکام نے قبضے میں لے لیا۔

پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن (پی آئی اے) کے ترجمان کا کہنا ہے کہ ملائیشیا میں عدالتی حکم پر طیارے کو تحویل میں لیا جانا ایک ناخوشگوار صورتحال ہے۔

مسئلے کے احسن حل تک مسافروں کی مناسب دیکھ بھال کی جائے گی۔

ترجمان پی آئی اے نے کہا کہ ملائیشیا میں پی آئی اے کا ایک طیارہ عدالتی حکم پر تحویل میں لیا گیا ہے۔ 2015 میں ملائشیا میں پی آئی اے کا طیارہ ویتنامی کمپنی سے لیز پر لیا گیا تھا۔

طیارے کی لیزکے واجبات ادا نہ کرنے پرملائیشیا میں پی آئی اے کا طیارہ قبضے میں لیا گیا، اس معاملے میں برطانوی عدالت میں پی آئی اے اورایک پارٹی کا کیس زیر التوا ہے۔

پی آئی اے اور برطانیہ کی عدالت میں زیر التواء دوسرے فریق کے مابین قانونی تنازعہ سے متعلق یک طرفہ فیصلہ ہے۔