صفحۂ اول / تازہ ترین / لاہور اورنج لائن ٹرین اسٹیشن کے عملے کامزدوروں پرڈنڈے سے تشدد
Orange Train Lahore

لاہور اورنج لائن ٹرین اسٹیشن کے عملے کامزدوروں پرڈنڈے سے تشدد

آن لائن: لاہور اورنج لائن ٹرین اسٹیشن کے عملے کا سردی سے بچنے کےلیے جلائی گئی  آگ سے دھواں اٹھنے پر 5 مزدوروں پر تشدد ۔

خاتون سمیت عملے کے افراد نے مزدوروں کو مرغا بنا کر ڈنڈے مار مار کر ادھ موا کردیا ۔جس سے ایک مزدور کی حالت غیر ہوگئی۔

سی سی پی او لاہور غلا م محمود ڈوگر نے واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے رپورٹ طلب کرلی ۔

بتایاگیا ہے کہ اورنج لائن اعوان ٹاؤن اسٹیشن کے عملے نے ہاتھ سینکنے کے لئے جلائی گئی آگ سے دھواں اٹھنے پر پانچ مزدوروں کو بدترین تشدد کانشانہ بنایا ہے ۔

ایک مزدور کی حالت غیر ہوگئی جس کو طبی امداد کیلئے قریبی ہسپتال منتقل کردیاگیا ۔

اطلاع ملتے ہی پولیس کی نفری موقع پر پہنچ گئی اورمزدوروں کو عملے سے بازیاب کرواکے عملہ کے قبضے سے ڈنڈے برآمد کرکے 6ملازمین کو گرفتار کرکے حوالات میں بند کر دیاجس میں ایک خاتو ن بھی شامل ہے۔

تشدد کرنے والوں میں فرمان، تنزیل، جاوید، عامر اور وقاص شامل ہیں۔

ایس پی اقبال ٹاؤن کا کہنا ہے کہ ملازمین کے خلاف مقدمہ درج سخت قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔

مزدوروں نے اپنے بیان میں کہاکہ سردی سے بچنے کیلئے آگ جلائی، دھوں اٹھنے سے اورنج لائن اہلکاروں نے تشدد کیا۔

سی سی پی او لاہور غلام محمود ڈوگر نے مزدوروں پر تشدد کے واقعہ کا نوٹس لے لیا۔

سی سی پی او کا کہنا ہے کہ ملزمان کیخلاف کارروائی کرتے ہوئے مزدوروں کو انصاف دلایا جائے گا۔

کسی کو قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت نہیں دین گے، رٹ آف دی اسٹیٹ کو ہر صورت قائم رکھا جائے۔

وزیراعلیٰ پنجاب سردارعثمان بزدار نے اورنج لائن میٹرو ٹرین کے عملے کی جانب سے مزدوروں سے  افسوسناک واقعہ کا نوٹس لیتے ہوئے سی سی پی او لاہور سے رپورٹ طلب کر لی ہے۔

وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے واقعہ کی تحقیقات کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ ان افراد کے خلاف قانون کے تحت کارروائی عمل میں لائی جائے۔

دریں اثنا پولیس نے تشدد کرنے والے 5 افراد کو گرفتار کر لیا ہے۔